گوگل لینس انسٹالیشن کی تعداد 50 سال سے تجاوز کرچکی ہے۔  فوٹو: فائل

گوگل لینس انسٹالیشن کی تعداد 50 سال سے تجاوز کرچکی ہے۔ فوٹو: فائل

سان فرانسسکو: تجزیہ کاروں کے گگل لینس ایک بہت زیادہ امپورٹ ایپ کی طرح نظر آتی ہے۔ اس ڈاؤن لوڈ اور انسٹالیشن کی بات کی جاسکتی ہے کہ ایپ 50 پراجیکٹ انسٹی ٹلیشن کا ہندسہ عبور کرچکی ہے۔ اس کامیابی میں گنج لینس کو صرف ڈھائی برس کا عرصہ ہوتا ہے۔

اگرچہ اس کا تذکرہ کم دن تھا لیکن سال 2020 میں اس کی دنیا کی دس دس اینڈروئڈ ایپس شامل تھیں۔ گینگ لینس میں آگ مینیٹڈ ریئلٹی (اے آر) کا طاقتور فیچر جو اطراف کا اشارہ ہے اس کا شناختی سند ہے۔ یہ ایپ اسکین رہتا ہے ، اس کی شناخت کسی بھی تحریر کا ترجمہ نہیں کرتی ہے۔ یہ بچوں کے ہوم ورک میں مدد فراہم کرتی ہے اور اس کی مدد سے 19 کی وبا میں بہت فائدہ ہوتا ہے۔ اس کے علاوہ گینگ لینس سے لے کر ٹیکسٹ ٹیکسٹ کی صورت میں پڑھا جاپا سرٹیفکیٹ ہے جبکہ کاپی ٹوپی کمپیوٹر کا آپ بھی فائدہ اٹھا سکتے ہیں۔ لینس کے استعمال ختم نہیں ہوسکتے ہیں اس کے علاوہ دوسرے فیکچرز بھی ایک بڑھتے ہوئے ہیں۔

اس کے علاوہ لباس اور فرنیچر کی تلاش بھی اس لینس میں مددگار ثابت ہوتی ہے۔ اگر کسی دوسرے ملک میں کوئی عمارت موجود نہیں ہے تو وہ عمارت میں یا جگہ کی تصویر لیجیے ایپ پر فوری طور پر اس کی جانچ جاری رکھے ہوئے ہے۔ اس کے علاوہ یہ پودوں ، جانوروں اور کتے والے مکوڑوںں کو بھی شناخت کرتے ہیں۔

جو مشکل ریاضی میں مشکل سے دوچار ہیں ، اس کا کوئی حل نہیں ہوسکتا ہے۔



Source link

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here