شاہنگ سینٹرز اور عوامی مقامات بند ہیں جب گھروں میں ہی پارٹیز کے انعقاد پر پابندی ہوتی ہے ، فوٹو: فائل

شاہنگ سینٹرز اور عوامی مقامات بند ہیں جب گھروں میں ہی پارٹیز کے انعقاد پر پابندی ہوتی ہے ، فوٹو: فائل

روم: کورونا وائرس کے خطرناک حد تک پھیلاؤ کو روکنے کے لئے اٹلی کے کرسمس اور سال نو کے موقع پر ملک بھر میں لاک ڈاؤن کا اعلان کیا گیا۔

کرسمس میں عالمی خبروں کے مطابق اٹلی کے بارے میں ملک بھر میں مشکلات کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔ اس واقعہ میں نوجوانوں نے اجتماعی طور پر کورونا کا امکان پھیلانے کو روک دیا ہے۔

لاک ڈاؤن کے دوران ملک کوڈ ریڈ بلدیات پر یقین رکھتے ہیں اسی طرح کی پابندی سے فائدہ اٹھانا پڑتا ہے۔ تمام غیر ضروری دکانیں ، شاپنگ مال اور اجتماعات پر پابندی ہوں۔

اس کے علاوہ گھروں میں ملازمت ، ایمرجنسی یا بیماری کی وجہ سے گھر سے نکلنے کی اجازت نہیں دی جاسکتی ہے جب گھروں میں بھی پارٹیز کا انعقاد ممنوع ہوتا ہے۔

اٹلی کے جوزپے کونٹے نے کرسمس پر لاک ڈاؤن کو مشکل مشکل ترین موقع سمجھا تھا کہ طبی ماہرین نے کرسمس اجتماعات سے کورونا کے پھیلاؤ میں بے گھروں سے کچھ زیادہ ہی خدشہ ظاہر کیا ہے۔

اٹلی کے مہمانوں نے مزید کہا کہ اس ماہ کے آخر تک ملک بھر میں کورونا ویکسین کا اغاز سرگرمی چل رہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ویکیسینیشن کواس عفریت کے خاتمے کا آغاز بھی ٹھیک ہوگیا۔

واضح رہے کہ اٹلی میں کورونا وائرس سے متاثرہ افراد کی تعداد 19 لاکھ تجاوز کر رہی ہے جب اس مہلک وائرس سے ہمیشہ تکلیف رہ جاتی ہے 67 ہزار ہزار افراد جو کسی یورپی ملک میں ہیں۔



Source link

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here