6 کروڑ پاکستانی ذہنی اور نفسیاتی امراض کا شکار ہیں ، نیورولوجی اویئرنیس فاؤنڈیشن۔  فوٹو: فائل

6 کروڑ پاکستانی ذہنی اور نفسیاتی امراض کا شکار ہیں ، نیورولوجی اویئرنیس فاؤنڈیشن۔ فوٹو: فائل

کراچی: پاکستان میں پوری دنیا میں ذہنی امراض میں غیر معمولی اضافہ ہوا۔

کورونا وائرس کی دنیا بھر میں ہر انسان کو کوشی ذہنی اور نفسیاتی مسائل میں بھی آگاہی ہے ، ذہنی تناؤ ، نیند کا آنا ، ڈپریشن اور مزاج میں تبدیلی بھی ذہنی امراض میں شامل ہیں۔ پاکستان میں دنیا بھر میں 10 اکتوبر کو ذہنی امراض سے بچاؤ کا عالمی دن منایا ہوا ہے۔ اس دن کی مناسبت سے ملک بھر میں مختلف تقاریب ہو رہی ہیں۔

پاکستان کی آبادی کا 6 فیصد ڈپریشن ، 1.5 فیصد شگافرینیا میں بالغ افراد میں مرگی کا مرض 1 فیصد اور اس مرض میں 2 فیصد پایا جاتا ہے۔ پاکستان میں منشیات کے عادی افراد کی تعداد 60 لاکھ تک پہنچ رہی ہے جو کسی ذہنی مرض میں شامل نہیں ہے۔

پاکستان نیورولوجی اویئرنیس اینڈ ریسرچ فاؤنڈیشن کی رپورٹ کے مطابق ، 22 کروڑ آبادی میں مجموعی طور پر 6 کنافراد مختلف ذہنی اور نفسیاتی امراض کا شکار ہیں اور ان مریضوں کے علاج کے ل ذہ دماغی امراض کے ڈاکٹروں کی تعداد صرف 200 فیصد ہے۔ کی تعداد 300 ہے۔



Source by [author_name]

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here