آیت اللہ خامنہ ای سابق امریکی صدر نے ڈرون حملوں میں قتل کا اشارہ کیا ، فوٹو: فائل

آیت اللہ خامنہ ای سابق امریکی صدر نے ڈرون حملوں میں قتل کا اشارہ کیا ، فوٹو: فائل

تہران: سماجی رابطے کی ویب سائٹ پر انتظامیہ کے بارے میں سابق امریکی صدر ڈونلڈ ٹرسٹ کوٹ نے ایران کو روحانی پیشوا آیت اللہ خامنہ ای اکاؤنٹ معطل کر دیا ہے۔

سماجی رابطے کی ویب سائٹ پر ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی ، دھونس دھمکی اور وقت پر اکسانے پر ایران کی طرف سے لیڈر آیت اللہ خامنہ ای اکاؤنٹ معطل ہونے کی بات واضح نہیں ہے لیکن معتلی کی مدت کتنی ہے۔

قبل ازیں سماجی رابطے کی ویب سائٹ پر ایران کے لیڈر آیت اللہ خانہ کی تصویر شائع کی گئی تھی جس میں سابق امریکی صدر ڈونلڈ ٹرسٹ جیسی شباہت کے پاس کسی شخص کو گولف کا سامنا کرنا پڑا تھا۔

کامنی ٹوئیٹر اکاؤنٹ معطل ہے

مشکوک شخص کی تصویر کوندی سے کسی ڈرون کی مدد لی گئی جو زمینی پراڈیک جدید ڈرون کا سایہ بھی نظر آرہا ہے اور کبھی بھی ڈرون سے نشانہ بننے جارہے ہیں۔

اس تصویر پر آیت اللہ علی خامنہ ای کی ماہانہ تاریخ کے بارے میں متن درج کیا گیا تھا جس میں انہوں نے لکھا تھا کہ “بدلہ ناگزیر ہے۔” جنرل قاسم سلیمانی کو قتل کرنا اور قتل عام کا حکم دینے والوں کو انتقام دینا ہوگا۔

خامنہ ای

لیڈر نے اس واقعے کا نام ہی نہیں لیا لیکن اس سے کچھ زیادہ ہی معزز بھی رہ گئے جنہوں نے اس سے دوری اختیار کرلی۔

واضح رہے کہ 3 جنوری کو 3 جنوری کو ایران کے قدیم فوجی جوانوں کے جنرل قاسم سلیمانی کو بغداد ایئرپورٹ پر امریکی ڈرون خاندان میں ساتھیوں کے ساتھ قتل کیا گیا تھا۔



Source link

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here