معصوم لڑکیوں پر دہشت گردی کا حملہ کرنے والا حملہ ، کوک غیر مستحکم کام کرنے کی واضح حکمت عملی ہے ، فخر عالم (فوٹو: فائل)

معصوم لڑکیوں پر دہشت گردی کا حملہ کرنے والا حملہ ، کوک غیر مستحکم کام کرنے کی واضح حکمت عملی ہے ، فخر عالم (فوٹو: فائل)

کراچی: پشاور میں مدرسے کے اندر آنے والے کارکنوں کو شورشے پر شوبز فنکار بھی غم میں ڈوب جاتے ہیں۔

پشاور کے علاقے دیر کالونی میں واقع مدرسے میں آنے والے 8 افراد شہید ہوئے جب 110 زخمیوں پر حملہ ہوا ۔افسوس کی بات یہ تھی کہ جب اس نے بڑی تعداد میں دینی تعلیم حاصل کی تھی۔ واقعہ جہاں سیاست دانوں کی ہر طبقاتی فکر کی وجہ سے پرزور مذمت پر آتی ہے وہ شوبز برادری بھی نہیں ہوتی جو بھی رنج و غم کا اظہار کرتی ہے۔

گلوکار علی ظفر نے ٹویٹر میں اظہار خیال کیا کہ وہ پشاور کے مدرسے کے دہشت گرد حلقوں کی رہائش پذیر ہیں ، آرمی پبلک اسکول کے واقعہ کی یاد تازہ ہے ، اس واقعے میں کوکلا بھلایا نہیں تھا۔

اداکار ہموں سعید نے کہا کہ پشاور میں دھماکے ہوئے سن کر رنجیدہ ہوں بس میرا دماغ کلینک ماؤف رہ گیا ہے ، اس سوچ کے بعد اس نے دوبارہ انکار کیا۔

گلوکار فرحان سعید نے افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ اللہ پاک مدرسے میں شہید ہوئے ہیں۔ میری نیک سائشات اور دعائیں زخمی اور شہدا کے خاندان والے ہیں۔

گلوکار و میزبان فخر عالم نے ان کا کہنا تھا کہ معصومیت سے متعلق دہشت گردی کا حملہ پاکستان کو غیر مستحکم کرنا ایک واضح حکمت عملی ہے جو ملک کے اندر ہے اور اس کے باہر بھی بزدلوں کی ایک مربوط اور منظم کوشش ہے۔ ہم قوموں کے پیروکاروں کے لئے کوئی ترقی نہیں ہے۔



Source link

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here