اگر جہاز اور کپتان اور فضائی میزبان عورتیں جہاز سے اترتے ہیں اور قیام کا انتظام کرتے ہیں تو کورونا ٹیسٹ لازمی ہوتا ہے۔  (فوٹو: فائل)

اگر جہاز اور کپتان اور فضائی میزبان عورتیں جہاز سے اترتی اور قیام کا انتظام کرتی ہیں تو کورونا ٹیسٹ لازمی ہوتا ہے۔ (فوٹو: فائل)

کراچی: سول ایوی ایشن نے تمام ایئر لائنز کے عملے کو کورونا ٹیسٹ سے استثنیٰ دیا۔

ایکسپریس نیوز کے مطابق سول ایوی ایڈیشن نے تمام ایئر لائنز کے عملے کو کورونا ٹیسٹ سے استثنیٰ دیا اور اس کی سی سی اے شبیہ ایئر ٹرانسپورٹ کے ساتھ متوقع احکامات جاری رہے۔

حکمنامے نے اس کیٹیگری بی میں شامل ممالک کے جہازوں پر کریو پر عائد کورونا ٹیسٹ کی شرط ختم کردی ، لیکن اگر جہازوں کا کپتان اور فضائی میزبان کے ساتھ متعدد جہاز جہاز سے اترنے اور قیام کے لئے تیار ہوئے تو یہ کورونا ہے۔

حکمنامے میں کیٹیگری بی میں شامل ممالک سے متعلق مسافروں کی تعداد میں مسافروں کے بارے میں ہے ، کورونا ٹیسٹ کرانے کی شرط لازمی ہے ، کری کو ہیلتھ ڈیکلریشن فارم پر معلومات درج کرنا لازمی ہے۔ پاکستان کے پاس کیٹگری کے 30 ممالک کے زیر اثر ہیں اور وہ کرونا ٹیسٹ کی شرط سے پہلے ہی ختم ہوجاتے ہیں۔



Source by [author_name]

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here