پیرس: فرانس میں گستاخانہ خاکوں کی تشخیص پر حکومت موجود ہے اور ترکی اور ترکی کی حکومت کا کہنا ہے کہ وہ فرانس کے ‘اندرونی معاملات’ میں مداخلت سے باشندے باشندے ہیں۔

خبر رساں ایجنسی ” رائٹرز ” کے مطابق ، فرانسیسی وزیرِ داخلہ جیرالڈ درمان نے سرکاری ریڈیو کو دیئے گئے ایک انٹرویو میں پاکستان اور ترکی کے رد عمل کے ساتھ خصوصی طور پر فرانس میں ہونے والے ایک مظاہرے کے بارے میں بتایا تھا۔ منظوری ” فرانس کے اندرونی معاملات میں مداخلت ”۔

واضح رہے کہ گستاخانہ خاکوں سے متعلق فرانس میں حالیہ واقعات اور فرانسیسی صدر ایمانوئیل میوندیاں کے بیانات کا بیان کیا گیا ہے ، ترک صدر رجب طیب اردوان نے فرانسیسی صدر کو دماغی علاج کا مشورہ دیا تھا ، اس نے کہا تھا کہ وہ فرانسیسی مصنوعات کی بائیکاٹیکاٹ کریں۔ کریں۔

یہ خبریں بھی پڑھیں:



Source link

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here