نیویارک میں ایک ماہ سے کم مدت میں گلیری میں انسانوں کے درمیان پانچ واقعات ہوتے ہیں۔  فوٹو: فائل

نیویارک میں ایک ماہ سے کم مدت میں گلیری میں انسانوں کے درمیان پانچ واقعات ہوتے ہیں۔ فوٹو: فائل

نیویارک: نیویارک کے نواح میں گیلریوں سے انسانوں کے واقعات بڑھ رہے ہیں۔

اگرچہ یہ واقعہ بہت کم تعداد میں ہے لیکن اس کے بارے میں خیال ہے کہ ماہنامہ اختیاری سے اب تک پانچ افراد نے ان لوگوں کو کاٹا یا نوچا بتایا ہے۔ ایک غیرمعمولی واقعے میں گیلری میں سے ایک اعلی افراد کے خاندان کے کوٹہ کی کوشش کی جا رہی ہے۔

گیلریوں کے حملوں کے سب سے زیادہ واقعات بورو ریگو پارک میں پیش آتے ہیں۔ یہاں ایک خاتون مچلین فریڈرک نے اس کے بارے میں بتایا کہ اس پارک میں اس نے ایک زندگی گلیری چھلانگ کریک کی ہے اور اس کے سامنے آبیٹ رہ گیا ہے اور اس سے پہلے کسی ناخن سے کلائی کو نوچا تھا اور اس کے بعد اس نے دانتوں سے لڑنے کی کوشش کی تھی۔ اس کوشش میں انگلینڈ اور خود سے متاثر ہوئے جس میں بڑی تعداد میں خون بہاؤ جاری ہے۔

اس واقعہ کے بعد اسی علاقوں کے دو افراد بھی اسی مقام پر گلیری کے جھڑپوں سے شکایات کر رہے ہیں اور ان خیالات سے یہ معلوم ہوتا ہے کہ ان تینوں واقعات میں ایک ہی جانور رہتا ہے۔ اس طرح ماہِ نومبر کے آخر میں پانچ افراد تک پہنچے۔

اس واقعے کے بعد کے علاقوں میں خوف و ہراس پھیل گیا اور لوگوں نے پارک میں اقتدار چھوڑنا چھوڑ دیا۔ لیکن اس موقع پر جنگلی حیات ماہرین کی سرگرمی میں مبتلا ہیں اور وہ اس کا وجوہ جانتے مقام نہیں ہیں۔

ایک اورخاتون نے بھی تشخیصی واقعہ بیان نہیں کیا۔ اس کے مطابق اس نے ایک بینچ پر بیٹھی تھی اور اس نے کہا کہ ایک گلیری پہلے دھیرے دھیرے کی ہو گی اور اس کے بعد پھدک کر گردن پر آپہنچی کہاں گیلہری نے پنجے یا دانت کی کوشش کی۔ یہ خوفناک واقعات کے بعد کی عورت بدحواس ہوکر بھاگ کھڑی ہو رہی ہے۔

نیویارک میں جنگلی حیات کے ماہرین نے اس پارک میں گلیری کو پکڑنے دیا ہے۔



Source link

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here