پولیس نے ایک پولیس اہلکار کو پیر کے روز لاہور کے ایک ہوٹل میں ایک لڑکی ڈانسر کے ساتھ بندوق کی نوک پر زیادتی کرنے کے الزام میں مقدمہ درج ہونے کے بعد گرفتار کیا۔

شہر کے گارڈن ٹاؤن پولیس اسٹیشن میں درج پہلی انفارمیشن رپورٹ (ایف آئی آر) میں ، ڈانسر نے الزام لگایا ہے کہ کبیر نامی ایک کانسٹیبل نے اسے ڈانس فنکشن کے لئے رکھا تھا اور اسے اس ہوٹل میں لے گیا جہاں گن پوائنٹ پر اس نے زیادتی کا نشانہ بنایا تھا۔

انسپکٹر جنرل پولیس (آئی جی پی) پنجاب نے واقعے کا نوٹس لیتے ہوئے سی سی پی او لاہور کو اس سلسلے میں رپورٹ پیش کرنے کی ہدایت کی ہے۔

انہوں نے محکمانہ اور قانونی کارروائی کا بھی حکم دیا۔

تفصیلات کے مطابق متاثرہ لڑکی نے ایک سال قبل چنگامانگا پولیس اسٹیشن میں عادل نامی شخص کے خلاف بھی ایسا ہی مقدمہ درج کیا تھا۔


YT چینل کو سبسکرائب کریں

Source by [author_name]

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here