کمانڈر ذبیح اللہ غیور ٹیم کے ہمراہ سرچ آپریشن کررہے ہیں ، فوٹو: فائل

کمانڈر ذبیح اللہ غیور ٹیم کے ہمراہ سرچ آپریشن کررہے ہیں ، فوٹو: فائل

کابل: طالبان کے ساتھ جھڑپ میں افغان فوج کا کمانڈر ذبیح اللہ غیور ہمیشہ اور متعدد اہلکار زخمی ہونے والا۔

افغان میڈیا کے مطابق فوج کی ایک چھاپہ مار ٹیم طالبان جنگجو واقعات پیش آرہی ہیں ، صوبہ اورزگان تھی جہاں سے پہلے جنگجو سے بچا ہوا فوجیوں کو چاروں طرف سے گھیر کر اندھا دھند بنائ گئی تھی۔

جنگجو تعلیم کی وجہ سے افغان فوج کا کم دستہ دار ہمیشہ ملتا ہے جب متعدد اہلکار کے قریب ہوتا ہے۔ افغان فوج کو مشکل سے بھاگنا پڑا۔ علاقوں میں افغان فوج کے مزید نفری کو تعینات کیا گیا ہے۔

افغان کمانڈر ذبیح اللہ غیور

افغانستان میں طالبان اور سیکیورٹی کی صورتحال کے بارے میں جھڑپوں کے سلسلے میں تیزی سے آگ لگ رہی ہے ، امریکہ اور طالبان افغانستان میں امن کی حالت خراب ہونے کی صورت میں ایک بار پھر سے فائدہ اٹھانا پڑا ہے۔

امریکہ کی بات یہ ہے کہ طالبان نے اس وقت افغانستان میں کمی کی ہے اور اس سے انحراف کیا ہے کہ جب طالبان نے امریکی فوجی معاہدے کی خلاف ورزی کی ہے تو وہ امریکی معاہدے کی خلاف ورزی کر رہے ہیں۔

واضح رہے کہ امریکہ کی نئی حکومت 2020 میں افغان طالبان کے ساتھ طے پانے والوں کے معاہدے پر نظر نہیں آتی ہے جب وہ دو دہائی میں جاری طالبان اور کابل حکومت کے درمیان ناکام ہوچکے ہیں۔



Source link

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here