شعیب اختر ، عبدالرزاق اور میرے ساتھ محمد عامر جیسا سلوک کیا ، شاہد آفریدی

شعیب اختر ، عبدالرزاق اور میرے ساتھ محمد عامر جیسا سلوک کیا ، شاہد آفریدی

راولپنڈی: قومی ٹیم کے سابق کپتان شاہد آفریدی کا کہنا ہے کہ ان کا کوئی امید نہیں ہے لیکن فلاحی کام کرنے والے ہمیشہ رہائش پذیر رہتے ہیں۔

روزنامہ نجی ہوٹل میں کشمیر پریمیر لیگ اور شاہد آفریدی فاونڈیشن کے مابین مشوروں نے اس موقع پر صحافی سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ قومی ٹیم کے سابقہ ​​آل راؤنڈر نے بتایا کہ وہ سب سے پہلے کھانے کی دکانوں پر مشتمل ہیں۔ اور کشمیر لیگ کے اجلاسوں میں مجھے اعزاز کی بات ہے ، اس لیگ کا ورلڈ ایمبیسڈر ہوں گے ، کشمیر کے اندر میچ ہوں گے تو آپ کو کشمیر کا فائدہ ہوگا۔

شاہد آفریدی نے کشمیر میں کرکٹ اکیڈمی کا اعلان کیا تھا کہ وہ کشمیر کے روزہ کرکٹ کی طرف سے آئے ہوئے تھے ، بہت سے اور اچھیلی ٹیلنٹ ، فاؤنڈیشن سپورٹ گیٹ ، اسپورٹس کے علاوہ صحت کی صورتحال بھی تھی ، جو کشمیر میں کام کر رہے تھے۔

وہ وقت ضرور گیا جب کشمیریوں کی آزادی کی حص ملےہ ، شاہد آفریدی

شاہد آفریدی کا کہنا تھا کہ جب کرونا وائرس لگ رہا ہے تو لوگوں کو مشکلات کا سامنا کرنا پڑے گا ، مستقل لوگوں کو اس کا حق دلانا سیاست سے بڑا کام ہے ، اس میں مستقل لوگوں کا کام رہنا ہے۔ ہمیشہ وزیر اعظم رہتے ہیں ، صرف انسانیت کے کام کی جگہ نہیں رہ سکتی ہے ، وزیر اعظم نے چار سالوں میں صرف ایک ہی کام کیا تھا ، جب وہ زندگی میں خود ہی رہتا تھا۔ وزیر اعظم رہائشیوں ،

سابق کپتان نے کہا کہ بھارت نے جموں کشمیر میں ظلم کی انتہا کر دی ہے ، دنیا میں بھی ناانصافی ہو رہا ہے اگر آپ کو ووہانوں کے لئے آواز اٹھانا پڑے تو مجھے کوئی فکر نہیں ہے کہ وہ ملک میں کام کے حصے میں ہیں یا پھر کبھی ایسا نہیں ہوگا۔ جب کشمیریوں کو آزادی کا حص ملےہ ، حکمرانوں پرظامہ داری ، کشمیریوں کے حقوق کی دوبارہ آوازیں آرہی ہیں۔

شعیب اختر ، عبدالرزاق اور میرے ساتھ محمد عامر جیسا سلوک کیا ، شاہد آفریدی

شاہد آفریدی نے کہا کہ پاکستان کرکٹ بورڈ کو ہر ٹیلنٹ کی تلاش کرنا ضروری ہے ، پی سی سی کے ساتھ کام کرنے والے کھلاڑی خود کو کو بھی گروم کرنے کی ضرورت ہے ، اس کے ساتھ ہی میں شعیب اختر اور عبدالرزاق کے ساتھ بھی تھا۔ عامر جیسا معاملہ ہوا۔



Source link

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here