تصویر میں گوٹھز نیف نمایاں ہیں جن کا بازو ایک بھوکے شیر نہیں ہے۔  فوٹو: بوٹسوانہ وائلڈ لائف

تصویر میں گوٹھز نیف نمایاں ہیں جن کا بازو ایک بھوکے شیر نہیں ہے۔ فوٹو: بوٹسوانہ وائلڈ لائف

بوٹسوانا: جنگلی حیات کی تحقیق کے ل ایک 32 سالہ سائنسدان کواس وقت جان کے لالے پڑھتے ہیں جب نیند کے دوران اس خیمے میں شیر گھس آئے تھے اور نوالہ کو کوشش کرنے کا موقع ملا تھا۔

اس دوران گوٹز نیف کا بازو شیر تھا لیکن اس نے ہم سے کوئی بات نہیں کی اور شیرکے منہ پر تپدروڑ کا مقام بچا لیا۔ اس دوران اس کے بازو پر دانت والے 16 مختلف زخم پائے ہوئے جنوری کے گھر بھی مختلف تھے۔

بوٹسوانا کی جنگ میں مصروف تھا جب سور دنا تھا اس رات کی تاریکی میں کسی کی غلاظت تھی۔ اس کے بعد اس نے خیموں کے کھلے حص حصوں سے باہر کسی جانور کی ناکامی کا سامنا کرنا پڑا۔ یہ ایک ببر شیر تھا جو اس سے زیادہ غضبناک تھا۔ اس کی مدد سے شورماچایا اور شیر نے اس کا بازو کوک جب تکلیف دی اور چیرپھاڑنے کی کوشش کی۔

وہ درد سے کراہت رہا اور اس کے بعد اس نے مزید گھڑسے رسید کیے۔ لیکن اس دوران شیر نے اس کی گردن اور سر کوبین کی کوشش کی جس سے پیشانی تھی زخم آگیا اور اس نے گوٹز کے بازو پر جب گرفتاری کو مزید مضبوط کر دیا۔

خوش قسمتی سے ایک دوسرے خیمے میں سویا اس کا دوست بیدار ہو گیا تھا اور ایک شاخ سے شیر پر حملہ ہوا تھا اور اس کا بھگادیا تھا۔ یہ دونوں ماہرین قومی جیوگرافک کی تحقیقات کے منصوبے پر کام کررہے ہیں۔ شاخوں کے پاس پاس بھی موجود تھے ، گوبر کوٹ بھی شیر پر پھینکا گیا تھا۔

اس کے بعد شیر تھوڑی دیر ہوگئی لیکن دوبارہ آگے بڑھا کیونکہ وہ بہت بھکا تھا۔ اس دوران روشن گولے سے ایک فائر فائر ہوا اور شیر بھاگ کھڑا ہوا۔ اس واقعے کے بعد انتہائی ماہر کوہ 80 کلومیٹر دور سے دور جایا گیا جہاں وہ روبہ صحت رہا۔



Source link

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here