ہر سال کی آمد پر فیس بک اور واٹس ایپ پر ایک ارب چالیس کروڈ آڈیو اور ویڈیو کالز کی خوشی ہوتی ہے۔  فوٹو: فائل

ہر سال کی آمد پر فیس بک اور واٹس ایپ پر ایک ارب چالیس کروڈ آڈیو اور ویڈیو کالز کی خوشی ہوتی ہے۔ فوٹو: فائل

سان فرانسسکو: پوری دنیا میں کورونا کے خوف اور امریکہ اور برطانیہ میں لاک ڈاؤن لوگوں کی وجہ سے محصور اور اس کے دوران پوری دنیا میں واٹس ایپ اور فیس بک (بمع میسنجر) ریکارڈ آڈیو اور ویڈیو کالز کی ایک جنوری کی تعداد ایک ارب چالیس ہے۔ کروڑوں کی بھگ بتائی ہے۔

واٹس ایپ اب کی فیس بک کی ملکیت اور سالانہ نسبت اس سال 2021 کے آغاز پر آڈیو اور ویڈیو کال کی تعداد میں دوگنا اضافہ ہوا ہے۔ ٹیکسٹ ، تصاویر ، اینی میشن اور گفس کا تبادلہ بھی اس میں شامل ہے۔ اس طرح دونوں پلیٹ فارم کے سرورز اور ڈیٹا بیس پر شروعاتی دباؤ واقع ہوئے۔

یہ اعدادوشمار سے بھی ثابت ہوا ہے کہ 19 وابہ اور لاک ڈاؤن لوگوں میں بڑی تعداد نہیں ہے واٹس ایپ اور میسنجر وغیرہ کو انسٹال کیا ہے اور اس سے رابطے جاری ہیں۔ دوسری کمپنیوں اور لاتعداد کے بارے میں اس نے گھریلو کاموں کو ضمن میں استعمال کیا ہے اور یہ ضروری نہیں ہے کہ یہ انفرادی سرگرمیوں میں شامل ہو۔

اس ضمن میں فیس بک اور واٹس ایپ نے مشترکہ طور پر اعدادوشمار جاری رکھے ہوئے ہیں۔ برسات یعنی 2020 میں آمدنی کے مقابلے میں 50 فیصد اعلی آڈیو اور ویڈیو کالز کی خوشی ہوتی ہے۔ اس کے علاوہ فیس بک اور انسٹا گرام پر بھی پانچ سالہ لاؤ نشریات کی گواہی ہے جو 99 فیصد سالانہ موقعوں سے متعلق رہتے ہیں۔



Source link

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here