ایف ڈی ایم برطانیہ کے تحت ایوری وومن ٹکنالوجی میں پاکستان کے سائنسی صحافی ، مترجم اور ناول نگار صادقہ خان بھی شامل تھے۔  فوٹو: بشکریہ ایف ڈی ایم

ایف ڈی ایم برطانیہ کے تحت ایوری وومن ٹیکنالوجی نے چھ فائنلسٹ میں پاکستان کے سائنسی صحافی ، مترجم اور ناول نگار صادقہ خان بھی شامل تھے۔ فوٹو: بشکریہ ایف ڈی ایم

کراچی: برطانیہ میں مسلسل گیارہ برسوں سے جاری ایف ڈی ایم ‘ایوری وومن انفارمیشن ایوارڈ’ کی چھٹی حتمی ناموں (فائنلسٹ) کوئٹہ کی خاتون سائنسی صحافی صادقہ خان بھی شامل تھیں۔

حقیقت یہ ہے کہ جیتنے کی صورت میں عام لوگوں کو مشکل سے پاک کرنے کی ضرورت ہے۔ ایف ڈی ایم کمپنی ہر برطانیہ اور اس کے علاء کی دنیا بھر میں ہرسات کو کوڈ ایوارڈ سے نوازتی کسی سائنس سے وابستہ سائنس میں تکنالوجی کو فروغ نہیں دے رہی ہے۔

صادقہ خان طبیعیات میں ماسٹرز کے بعد سائنیا نامی ویب سائٹ کی بنیاد رکھی اور اس کی سی ای ای ہیں۔ اس ویب سائٹ ملک میں عام فہم انداز میں سائنسی ابلاغ اور شعور کا اہم فریضہ سر انجام دینا ہے۔ اس کے علاوہ صادقہ خان نے اردو زبان میں ‘مستقل’ نامی پہلا ناول بھی لکھا ہوا ہے جو ماحولیات اور آب و ہوا میں تبدیلی کے پس منظر میں تحریر کیا ہوا تھا۔

صادقہ خان مشہور مشہور سائنسی کتب کے مترجم بھی ہیں اور اسی طرح اردو پر سائنس بورڈ کے اعزاز بھی نوازے گئے ہیں۔ اس کے علاوہ بارش کا دن وہ سائنسی رپورٹ پر آگہی ایوارڈ کا بھی نام تھا۔ ان کی تحریریں اور سائنس فچر بی بی سی ، ڈوئکٹ ویلے اردو اور ڈان میں اردو اور انگریزی زبان میں شائع ہونے والی باتیں ہیں۔

ایف ڈی ایم کے تحت چار مارچ کوٹہ حتمی مجازی (ورچول) مقام میں ایوارڈ کا اعلان کیا ہے۔ اس ویب سائٹ کے لوگوں کی حوصلہ افزائی کرنے کی ضرورت ہے جس میں سائنس اور سائنس کی تشہیر کی جا کردار۔

واضح ہے کہ ایف ڈی ایم گروپ برطانیہ میں کاروبار ، اسٹارٹ اپ اور ٹیکنالوجی پر مبنی ترقی اور معیشت کو کو فروغ دینے والا ایک اہم ادارہ ہے۔ اس ٹیکنالوجی اور صنعتی ماہرین کو تربیت ، تعلیم اور ملازمت کے مواقع بھی فراہم کرتے ہیں اور ہرسال اس شعبے میں 2000 نئی ملازمت اور ملازمین کو فروغ دیتے ہیں۔

اس کا اہم سائنس اور ٹیکنالوجی شعبوں میں صنفی خلیج کو کم کرنا اور لوگوں کو بہتر مواقع بھی فراہم کرنا ہے۔



Source link

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here