نیوزی لینڈ کے ادارہ برائے ہنگامی حالات ساحلی علاقوں میں بس والی آبادی کو کاپی مکانی کی ہدایت جاری رکھے ہوئے ہیں۔ (فوٹو ، فائل)

نیوزی لینڈ کے ادارہ برائے ہنگامی حالات ساحلی علاقوں میں بس والی آبادی کو کاپی مکانی کی ہدایت جاری رکھے ہوئے ہیں۔ (فوٹو ، فائل)

سڈنی: جنوبی بحرالکاہل میں 7 اعشاریہ 7 شدت کے ہولناک زلزلے کے بعد خط میں موجود ممالک کو سونامی خطرے سے دوچار ہے۔

غیرملکی خبروں کے مطابق امریکی جغرافیائی سروے کا کہنا بدھ اور جمعرات کی درمیانی شب نیو کیلوڈونیا کے مشرق میں 415 کلومیٹر دور واؤ کے مقام پر 7 اعشاریہ 7 انتہائی قریب کا زلزلہ آیا۔ زلزلے کے بعد کی امریکی حکومت کی سونامی وارڈینگ سینٹر خطرناک سونامی کی لہروں کی پیش گوئی جاری تھی۔

فاتح ، نیوزی لینڈ اور 80 چھوٹے چھوٹے جزائر پر واقع ملک وینواتو سے اونچی لہریں ٹکرانے کا خدشہ ہے۔ اعجاریہ 3 میٹر اونچی لہریں ٹکرائیں۔

اس کے علاوہ آسٹریلیا کی موسمیات بھی سونامی کی بلند لہروں کی تصدیق کر رہی ہیں۔ موسم گرما میں رہنمائی کرنے والا نام نہاد جزیرے والے لوگوں کو سونامی کا خطرہ ہے۔

دوسری طرف نیوزی لینڈ کے ادارہ برائے ہنگامی حالات بھی ساحل کے مقام میں بس والی والی آبادی میں نقل مکانی کے لئے ہدایت جاری رکھے ہوئے ہیں۔ بیان میں خدشہ ظاہر ہوا ہے کہ 7 اعشاریہ 7 شدت کے بعد زلزلے کے بعد ساحلی مقام سے لڑائی معمول کے مطابق بلند ہوکر لہریں ٹکرا رہی ہیں۔

واضح طور پر 2004 میں انڈونیشیا کے جزیرے سماٹرا میں 9 جنوری کو 1 اعشاریہ 1 شدت کے زلزلے کے بعد سونامی سے 2 لاکھ 20 ہزار افراد اموات آئے تھے۔



Source link

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here