عرب خبر رساں کے مطابق ایرانی کمانڈر کو عراق اور شام کی سرحد پر نشانہ بنایا گیا (فوٹو ، فائل)

عرب خبر رساں کے مطابق ایرانی کمانڈر کو عراق اور شام کی سرحد پر نشانہ بنایا گیا (فوٹو ، فائل)

بغداد: ایران کے سپاہ پاسداران انقلاب کے اہم کمانڈرکی ڈرون واقعات میں واقعات کی اطلاعات سامنے آتی ہیں۔

خلیجی خبر رساں علم العربیہ نے دعویٰ کیا ہے جو عراقی مقام پر مبنی ہے۔ ایرانی کی سپاہ پاسداران انقلاب کم مسلمدار شاہدان کو عراق اور شام کی سرحد پر ڈرون سے نشانہ بنایا گیا ہے۔

العربیہ کا کہنا ہے کہ ایرانی کمانڈر کو اتوار کے شب شام کے ساتھ واقع سرحدی علاقوں کی نشاندہی کی گئی تھی۔

خبروں کے بارے میں عراقی خفیہ رابطوں سے متعلق بتایا گیا ہے کہ ایرانی کمانڈر کی اطلاع کی تصدیق کے علاوہ اس واقعات کی دیگر چیزیں سامنے نہیں آسکتی ہیں۔

عراقی صوبے انبار میں پیشی کے بارے میں یہ واقعات کے بارے میں العربیہ کا کوئی غیر مصدقہ اطلاعات نہیں ہے ڈرون نے ایرانی کمانڈر کی کار کو نشانہ بنایا ہے۔ ایران میں ملیشیا کے دو نوجوان بھی ساتھ ہی رہتے ہیں ، لیکن لبنانی خبریں بھی نہیں ہوتی ہیں۔

یہ خبر بھی ہے: بغداد ایئرپورٹ پرامریکی کمرے میں ایرانی جنرل قاسم سلیمانی 8 افراد ہمیشہ

عراق کے دارالحکومت بغداد کے ایئرپورٹ پرامریکا کی طرف سے واضح طور پر روایتی سال جنوری میں 8 افراد مستقل طور پر موجود رہتے ہیں۔ راکٹ میں ایرانی حمایت یا ہفتہ ملیشیا پاپولرموبلائزیشن فورس (پی ایم ایف) کی ڈپٹی کمانڈرابومہدی المہندس بھی ہمیشہ ہی رہتی ہے۔ امریکی صدر کی تصدیق کی یہ تھیٹر اس حملہ آور کی بات ہے۔



Source link

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here