لبنانی بچ اپنےہ کے ساتھ ایک دن پہلے ہی مرغیاں لے گئی تھیں۔ (فوٹو ، انٹرنیٹ)

لبنانی بچ اپنےہ کے ساتھ ایک دن پہلے ہی مرغیاں لے گئی تھیں۔ (فوٹو ، انٹرنیٹ)

بیروت: اسرائیلی فوج کی سرحد کے خلاف ورزی پر لبنانی ہر مرتبہ مرغی کو حراست میں لے جا۔

خلیجی خبر رساں والوں نے بتایا کہ مرغی نے لبنان اور اسرائیل کے درمیانی سڑک پارلیہ پر اسرائیلی فوجی گھبراہٹ کا شکار ہونے والا واقعہ پیش کیا۔

مقامی صحافی کو حسین شرتونی کے بارے میں بتایا گیا کہ وہ اپنے بھائیوں کے ساتھ گھر میں رہتے ہیں اور روز مرہ پہلے ہی مرغیاں لیتے ہیں۔ صبح کے وقت جب اس نے دانہ کو ڈرانگ کیا تو مرغ کھانے کی دکانوں میں سے ایک مرغی نے اسرائیلی سرحد کی دوڑ لگادی۔

شرونیی کے گھر سے صرف 70 میٹر فاصلے پر اسرائیلیوں کی لگائی ہوتی ہے ، اس سے مرغی واوچی تو اسرائیلی گھبرا ہوتے ہیں۔ وہاں موجود سینسرز سے اطلاع ملی کہ کوئی سرحد عبور واقع نہیں ہے۔ اس اشارے سے ملنے والے ہی ان کی شادی شروع کر رہے تھے۔

مقامی صحافی سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے بتایا کہ اس نے مرغی سرحد عبور کرگئی اور ابھی واپس نہیں کیا تھا ، اس سے مرغی اسرائیلی فوجیوں نے خود کو لیٹ لیا ہے۔

سرحد سے متصل اس قصبے کی بلدیہ کی بات ہے عبدالمنعم کا یہ ایک چھوٹا سا واقعہ ہے جس کی وجہ سے سراسر کو ایک جارحانہ ہونا چاہئے۔ یاد رہے کہ اسرائیل ہمیشہ لبنان پر مبنی نگرانی رکھی ہے لیکن اس کے علاقوں میں ڈرونز اور جنگی طیاروں کے پرازوں میں پندرہ گنا اضافہ ہوا ہے۔

اس سے پہلے سنہ 2019 میں بھی یہ واقعہ پیش آیا تھا جب وہ تشتش نامی ایک بندرگاہ سرحدی گاؤں سے باڑ عبور واقع شمالی اسرائیل میں داخل ہوئے تھے جہاں موجود تھا۔



Source link

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here